اسلام آباد ہائیکورٹ کا وفاقی دارالحکومت 
16-10-2021
اسلام آباد (خبر نگار) اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے وفاقی دارالحکومت سے تمام تجاوزات فوری ختم کرنے کا حکم دیتے ہوئے سی ڈی اے کو ہدایت کی کہ ہے پلاٹ لائن سے باہر جس نے بھی تجاوز کیا گرا دیں ، کچی آبادیوں میں بھی سرکاری زمینوں پر نئے قبضے روکے جائیں۔ عدالت نے کچی آبادیوں میں بنیادی سہولیات کی فراہمی کے علاوہ سرکاری زمینوں پر قبضوں پر آپریشن سے روکنے کے سٹے آرڈرز کی رپورٹ بھی طلب کر لی ۔ گزشتہ روز سماعت کے دوران چیف جسٹس نے نالوں پر قبضے کر کے تعمیرات کرنے والوں کیخلاف بھی کارروائی کا حکم دیا اور نالہ کورنگ کے کنارے تعمیرات کر کے قبضہ کرنے والوں کا حکم امتناع خارج کر دیا۔ چیف جسٹس نے سی ڈی اے کو قانون کے مطابق بلا امتیاز کارروائی کا حکم دیتے ہوئے کچی آبادی ، سرکاری زمینوں پر قبضوں کے مقدمات کی سماعت دو ہفتوں کیلئے ملتوی کر دی۔